فرض کرو

Standard

فرض کرو ہم اہل وفا ہوں ، فرض کرو دیوانے ہوں

فرض کرو یہ دونوں باتیں جھوٹی ہوں افسانے ہوں

 
 

فرض کرو یہ جی کی بپتا ، جی سے جوڑ سنائی ہو

فرض کرو ابھی اور ہو اتنی ، آدھی ہم نے چھپائی ہو

 
 

فرض کرو تمہیں‌خوش کرنے کے ڈھونڈے ہم نے بہانے ہوں

فرض کرو یہ نین تمہارے سچ مچ کے میخانے ہوں

 
 

فرض کرو یہ روگ ہو جھوٹا ، جھوٹی پیت ہماری ہو

فرض کرو اس پیت کے روگ میں‌سانس بھی ہم پر بھاری ہو

 
 

فرض کرو یہ جوگ بجوگ ہم نے ڈھونگ کچایا ہو

فرض کرو بس یہی حقیقت باقی سب کچھ مایا ہو

[ابنِ انشاً]

Advertisements

6 responses »

  1. فرض کرو تم کچھ نا پاؤ، اپنا آپ لٹا کر بھی
    فرض کرو کوئی مکر ہی جائے، سچی قسم اٹھا کر بھی

    اور فرض کرو یہ فرض نا ہو، سچی ایک حقیقت ہو
    تیرے عشق کے ہر رستے پر، جانا ایک قیامت ہو

    اور سنا ہے یہ قیامت خون جگر کا پیتی ہے
    تم تو جانا فرض کرو گے، مجھ پہ یہ سب بیتی ہے۔ ۔ ۔

  2. Ibne Insha was great ………………
    i have read his story about the rabbit and tortoise ……….
    and many other things …………….

  3. http://satdeep.co.nr/

    Come here to enjoy the best music , poetry and movies around the world ………………………………………
    And see the world from the eyes of an Atheist as well as an Unitarian Universalist ..

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s