Monthly Archives: July 2011

My Intentions / desires…

Standard

“میں نے اپنے الله کو اپنے ارادوں کے ٹوٹنے سے پہچانا”
حضرت علی رضی الله عنہہ

I recognized Allah through breaking of my own intentions/desires.

Hazrat Ali Razi-Allah-o-anho

 نوٹ :  مندرجہ ذیل الفاظ “حدیثِ قدسی”   نہیں ہیں ۔ ۔  میں نے  نیٹ پر کافی ریسرچ اور مسجد میں ایک مفتی صاحب  سے پوچھنے پر یہ تصدیق کی ہے۔ دوسروں کو بھی یہ بتا کر اُن کی تصحیح کریں 


اے ابنِ آدم

ایک تیری چاہت ہے…. اور ایک میری چاہت ہے

مگر ہوگا وہی…. جو میری چاہت ہے

اگر تو نے خود کو سپرد کردیا اُس کے…. جو میری چاہت ہے

تو میں بخش دوں گا تجھ کو…. جو تیری چاہت ہے

اور اگر تونے نافرمانی کی اُس کی…. جو میری چاہت ہے

تو میں تھکا دوں گا تجھ کو اُس میں…. جو تیری چاہت ہے

اور پھر ہوگا وہی…. جو میری چاہت ہے

——————-

Important Note: The following words are wrongly quoted as ‘Hadith e Qudsi’ . I did a lot of research on web and also personally asked Alim about it. These words have no reference at all. Please correct others if they have this misconception too. 

I desire something and you desire something

but only what I desire occurs.

If you submit yourself to my desire (i.e. obey Him)

I will be sufficient for you in your desire.

If you do not submit yourself to my desire (by disobeying Him),

I will tire you in what you desire

and (at the end of the day)

what I wish will occur

 

Advertisements