Tag Archives: ghazal

Apne Honto’n Pe Sajana Chahta Hoon ( اپنے ہونٹوں پہ سجانا چاہتا ہوں )

Standard

 

اپنے ہونٹوں پر سجانا چاہتا ہوں

آ تجھے ميں گنگنانا چاہتا ہوں

 

کوئی آنسو تيرے دامن پر گرا کر

بُوند کو موتی بنانا چاہتا ہوں

 

تھک گيا ميں کرتے کرتے ياد تجھ کو

اب تجھے ميں ياد آنا چاہتا ہوں

 

چھا رہا ہے ساری بستی ميں اندھيرا

روشنی کو، گھر جلانا چاہتا ہوں

 

آخری ہچکی ترے زانو پہ آئے

موت بھی ميں شاعرانہ چاہتا ہوں

قتیل شفائی

*Background image is an artwork by Iman Maliki

 

Advertisements

Mausam Ki Adaa Dekh ke Yaad Aya (موسم کی ادا دیکھ کے یاد آیا۔)

Standard

اب کے تجدیدِ وفا کا نہیں امکاں جاناں

یاد کیا تجھ کو دلائیں تیرا پیماں جاناں

یونہی موسم کی ادا دیکھ کے یاد آیا

کس قدر جلد بدل جاتے ہیں انساں جاناں

دل یہ کہتا ہے کہ شاید ہو افسردہ وہ بھی

دل کی کیا بات کریں، دل تو ہے ناداں جاناں

جس کو دیکھو وہی زنجیر با پا لگتا ہے

شہر کا شہر ہوا داخلِ زنداں جاناں

اب تیرا ذکر بھی شاید ہی غزل میں آئے

اور سے اور ہوا درد کا عنواں جاناں

احمد فراز

Ab ke tajdeed-e-wafa ka nahin imka’n jana’n

Yaad kya tujhko dilayain tera paima’n jana’n !

Yunhi mausam ki adaa dekh ke yaad aya

Kis qadar jald badal jate hain insaa’n jana’n !

Dil ye kehta hai ke shayad ho fasurda tu bhi

Dil ki kya baat karain … dil to hai nadaa’n jana’n !

Jis ko dekho wohi zanjeer-ba-pa lagta hai

Sheher ka sheher hua dakhil-e-zinda’n jana’n !

Ab tera zikr bhi shayad hi gazal main aye

‘Aur’ se ‘Aur’ hua dard ka unvaa’n jana’n !!!!

~Ahmad Faraz